نو منتخب وزیراعلی کی جانب سے دائر درخواست، عدالت نے دوبارہ اعتراض لگا کر واپس کردیا

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک ) نو منتخب وزیراعلی پنجاب حمزہ شہباز کی جانب سے دائر درخواست کو دوبارہ اعتراض لگا کر واپس کردیا گیا ہے۔ حمزہ شہباز نے حلف سے انکار پر دوبارہ لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کیا تھا۔ ہائیکورٹ آفس نے دوبارہ دائر درخواست میں گورنر پنجاب کو فریق بنانے کا اعتراض عائد کیا ہے۔ حمزہ شہباز نے اعظم نذیر تارڑ اور عطا اللہ تارڑ کے ذریعے لاہور ہائیکورٹ میں آئینی درخواست دائر کی تھی۔ درخواست میں گورنر پنجاب اور چیف سیکریٹری پنجاب کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ 16 اپریل کو 197 ووٹ لیکر قائد ایوان منتخب ہو چکا ہوں، قانون کے مطابق گورنر نے وزیراعلی کا حلف لینا تھا لیکن گورنر نے حلف لینے سے انکار کر دیا۔ درخواست میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ گورنر اپنی ذمہ داریاں پوری نہ کرکے آئین کی خلاف ورزی کر رہے ہیں، عدالت سے استدعا ہے کہ لاہور ہائی کورٹ گورنر پنجاب کو حلف لینے کے احکامات جاری کرے۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز ہائیکورٹ نے درخواست نامکمل ہونے کی بنا پر واپس کر دی تھی اور رجسٹرار آفس نے موقف اختیار کیا تھا کہ درخواست کے ساتھ مطلوبہ مکمل دستاویزات منسلک نہیں ہیں۔